Home زبان و ادب ادبی شخصیات غالب اکیڈمی کا غالب کو خراج عقیدت۔مزار غالب پر طرحی مشاعرہ

غالب اکیڈمی کا غالب کو خراج عقیدت۔مزار غالب پر طرحی مشاعرہ

0
88

انجمن ترقی اردو (دہلی شاخ) نیشنل امیر خسرو سوسائٹی اورشاعرہ
انجمن ترقی اردو (دہلی شاخ) نیشنل امیر خسرو سوسائٹی اور غالب اکیڈمی کا غالب کو خراج عقیدت
انجمن ترقی اردو (دہلی شاخ) نے نیشنل امیر خسرو سوسائٹی اور غالب اکیڈمی کے اشتراک سے 15؍ فروری کو مزار غالب پر ایک پروقار طرحی مشاعرے کا انعقاد کیا، جس میں شہر کے نامور شعرا نے طرحی کلام پیش کر کے غالب کو خراج عقیدت پیش کیا۔ اس موقع پر شعرا نے جو کلام پیش کیا اس سے سامعین محظوظ ہوئے اور آئندہ بھی اس رسم کے جاری رہنے کی خواہش ظاہر کی۔ چند اشعار بطور نمونہ پیش خدمت ہیں:
ہونے کو ہو جہان میں جتنی وبا بلند
اس کی رضا اگر ہو تو ہوگی شفا بلند
(شاہد انور)
کس کا لہو فضاؤں میں پھیلا ہے ہر طرف
بدلی سے ہو رہا ہے جو رنگ حنا بلند
(چشمہ فاروقی)
ہر چند غیبت سے پہلے سوچو
برائی کیا ذہن کی قے نہیں ہے
(خالد اخلاق)
ایسے میں کس طرح رکھوں حوصلہ بلند
غصے میں اس نے کر لیا ہے دسپنا بلند
(اقبال فردوسی)
استاد مرتبہ تھا ضرور آپ کا بلند
پر جتنا شور سنتے تھے اتنا نہ تھا بلند
(معین شاداب)
کیوں خواب در بدر کیے اے چشم نیم باز
آواز ہو رہی ہے یہیں جا بجا بلند
(آشکارا خانم کشف)
پچھلے پہر ہوئی ہے ندائے خدا بلند
کرتے رہو قرینے سے دست دعا بلند
(ڈاکٹر عفت زریں)
درویش صفت ہیں مست بہر حال
ہر نشے کو شرط مے نہیں ہے
(نسیم عابدی)
جس میں الفت کی لے نہیں ہے
کنہیّا کی نَے نہیں ہے
(متین امروہوی)
پورا نہ اترا کوئی کسو ٹی پہ ظرف کی
سب ایک دائرے میں ہیں کیا پست کیا بلند
(وقار مانوی)
یہ کیسا قہر تیری سیاست نے ڈھادیا
فریاد کی ہے چاروں طرف صدا بلند
(ظفر مراد آبادی)
انجمن ترقی اردو (دہلی شاخ) کے فعال اور متحرک صدر جناب اقبال مسعود فاروقی ،جناب خورشید عالم صاحب (جنرل سکریٹری انجمن ترقی اردو دہلی شاخ) اور جناب ادریس احمد صاحب (جوائنٹ سکریٹری انجمن ترقی اردو دہلی شاخ) ڈاکٹر عقیل احمد سکریٹری غالب اکیڈمی نے اپنی اور ادارے کی جانب سے تمام شعرا اور سامعین کا شکریہ ادا کیا۔

NO COMMENTS

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here