کشمیر میں سیلاب کی تباہ کاریوں کے پانچ سال مکمل

0
31
کشمیر میں سیلاب کی تباہ کاریوں کے پانچ سال مکمل

سری نگر: وادی کشمیر میں ہفتہ کی صبح جب کالے اور گھنے بادل آسمان پر چھا گئے تو اہلیان وادی پانچ سال قبل اسی دن آنے والے تباہ کن سیلاب کی یادیں تازہ کرنے لگے۔ سری نگر کے مضافاتی علاقہ حیدرپورہ سے تعلق رکھنے والے ایک تاجر جن کی تاریخی لالچوک میں دکان ہے، نے بتایا کہ 7 ستمبر 2014ء کو آنے والے تباہ کن سیلاب کی تباہ کاریوں کو کبھی بھی بھلایا نہیں جاسکتا۔انہوں نے کہاکہ ’بارش اللہ کی طرف سے ایک بہت بڑی نعمت ہے لیکن ہم اُس شہر میں رہتے ہیں جہاں محض ایک گھنٹے کی بارش سیلاب کا سبب بنتی ہے۔ آپ نے گزشتہ ماہ ہی دیکھا کہ کس طرح آدھے گھنٹے کی بارش کے بعد ہی لالچوک ڈوب گیا‘۔
انہوں نے مزید کہا: ‘لالچوک میں ہماری دکانیں 5 اگست سے مسلسل بند ہیں۔ ہمارا کاروبار تو ختم ہوچکا ہے لیکن اب یہ ڈر ستا رہا ہے کہ کسی دن زیادہ بارش ہوئی تو دکانوں میں موجود ہمارا مال بھی خراب ہوجائے گا’۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here