مذہبی معاملات میں حکومت کو دخل نہیں دینا چاہیے:مولانا کلب جواب

جون پور: اترپردیش کے جونپور میں معروف و مشہور شیعہ عالم دین مولانا کلب جواد نے کہا ہے کہ اسلام میں تین طلاق کو جائز نہیں سمجھا گیا ہے، معروف عالم دین نے جون پور میں الم نوچندي کی مجلس میں شامل هونے آئے تھے۔ اس موقع پر شیعہ عالم دین نے یہاںمیڈیا سے کہا کہ اسلام میں تین طلاق کو جائز نہیں مانا گیاہے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ لیکن مذہبی معاملات میں حکومت كو دخل نہیں دینا چاہیے۔
اس کا فائدہ اٹھا کر خواتین پر ظلم کسی بھی نقطہ نظر سے ٹھیک نہیں ہے، اس کی پرزور مخالفت کی جانی چاہئے۔شیعہ عالم دین نے کہا کہ ذاتی مذہبی معاملات میں حکومت کا دخل بھی ٹھیک نہیں ہے۔ مسلم پرسنل لامیں تین طلاق کو مکمل طور پر ختم کرنے کی پہل ہونی چاہئے۔ انهوں نےے کہا کہ تین طلاق قرآن مجید کے خلاف ہے۔ فون، ای میل اور خط کے ذریعہ تین طلاق کو نہیں مانا جا سکتا ہے۔ خواتین پر ظلم اسلام میں بدترین قراردیا گیا ہے، لہذا تین طلاق پر سختی سے پابندی لگنی چاہئے اور یہ مسلم پرسنل لا کے تحت کیا جائے تو بہتر رہے گا۔ وہ خود تین طلاق کے خلاف ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram