این سی پی سے الگ ہوئے سینئر لیڈر طارق انور کانگریس میں شامل

این سی پی کے قدآور لیڈر اور پانچ مرتبہ بہار کے کٹیہار سے لوک سبھا کے رکن رہ چکے طارق انور نے کانگریس صدر راہل گاندھی کی موجودگی میں کانگریس میں شمولیت اختیار کرلی ہے۔ کچھ دنوں پہلے وہ این سی پی کے صدر شردپوار کے ایک بیان سے ’جس میں انہوں نے وزیراعظم نریندر مودی کی رافیل ڈیل پر حمایت کی تھی‘خود کو این سی پی سے الگ کرلیا تھا۔ اس کے بعد قیاس آرائی شروع ہوگئی تھی کہ وہ کانگریس میں جاسکتے ہیں۔ یہ تو ہے کہ جب بھی کوئی بات نکلتی ہے تو وہ دور تک جاتی ہے۔ وہی ہوا جو لوگوں کا اندازہ تھا ۔ یعنی طارق انور نے کانگریس کا دامن تھام ہی لیا۔ اب ایسا مانا جارہا ہے کہ طارق انور اگلے لوک سبھا الیکشن میں کانگریس کے ٹکٹ پر لڑ سکتے ہیں ۔ مانا جارہا ہے کہ لالو پرساد کے تعاون سے وہ مہاگٹھ بندھن کے امیدوار ہوں گے۔
تفصیلات کے مابق پانچ مرتبہ بہارکے کٹیہار سے لوک سبھا کے رکن رہ چکے این سی پی کے سابق لیڈر طارق انور نے ہفتہ کو کانگریس کا دامن تھام لیا ۔ دہلی میں کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے انہیں کانگریس میں شامل کرایا ۔ ایسا مانا جارہا ہے کہ طارق انور اگلے لوک سبھا الیکشن میں کانگریس کے ٹکٹ پر لڑ سکتے ہیں ۔ مانا جارہا ہے کہ لالو پرساد کے تعاون سے وہ مہاگٹھ بندھن کے امیدوار ہوں گے۔ خیال رہے کہ شرد پوار کے ذریعہ رافیل معاہدہ پر نریندر مودی کا ساتھ دینے کے بعد طارق انوار نے 19 سالہ رشتہ ختم کرتے ہوئے این سی پی کی رکنیت کے ساتھ ساتھ لوک سبھا کی رکنیت سے بھی استعفی دیدیا تھا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram