بے بس ولاچار دکھی انسانیت کی خدمت ہی اصل عبادت ہے: غیور احمد قاسمی

نئی دہلی: اسلام محبت وامن کا داعی مذہب ہے جس نے ہرموقع پر غریبوں کے حقوق کا خیال رکھنے کا حکم دیا ہے دہلی واطراف دہلی میں روہنگیائی مسلمان پناہ لئے ہوئے ہیں جن کے پاس اپنی جان کے علاوہ کچھ نہیں ہے یہ لوگ انتہائی کسمپرسی کی زندگی گذار رہے ہیں۔ کھجوری نورانی مسجد کالندی کنج، شرم وہار، اتم نگر، بدیلہ ، رن ھولہ، فریدآباد سیکٹر ۸۶، مجیڈی گائوں، نوح میوات، نگلی ۱۔۲ وغیرہ میں ان لوگوں کی بڑی تعداد کھلے آسمان کے نیچے اپنے معصوم بچوں کے ساتھ لاچاری اور بے بسی کی زندگی گذارنے پر مجبور ہیں۔
سردی کے شدید حالات میں ان لوگوں کے ہمارے ذمہ حقوق ہیں ہر علاقے کے صاحب ثروت ومخیرافراد اپنے قریبی کیمپ میں جاکر ان لوگوں کی خبرگیری کریں اور ان کی مشکلات کو دور کرنے میں تعاون کریں۔ مولانا غیور احمد قاسمی نے کہا کہ پریشان حال لوگوں کی مدد کرنے میں دعائوں کی مقبولیت کا راز چھپا ہوا ہے خوش نصیب ہیں وہ لوگ جن کی کوششوں سے پریشان حال لوگوں کے چہروں پر مسکان آتی ہے اور مصیبت زدہ لوگوں کی مدد کو بڑی عبادت سمجھتے ہیں ارشاد نبوی ہے کہ بہترین آدمی وہ ہے جو دوسرے انسانوں کو زیادہ نفع پہنچانے والا ہو۔ مشہور بزرگ حضرت بشر حافیؒ کو کسی نے موسم سرما میں برہنہ اورکپکپاتے ہوئے دیکھ کر پوچھا کہ ا ٓپ اتنی اذیت وتکلیف کیوں برداشت کرتے ہیں فرمایا کہ اس وجہ سے کہ اس سردی میں غریب ولاچار فقراء پریشان ہوںگے ان کا کیا حال ہوگا اور میرے پاس اتنا دینے کے لئے نہیں کہ ان کی احتیاج ختم کرسکوں اس لئے جسمانی طور پر ان کا شریک رہتا ہوں۔ معاشرے کے ہر فرد کو اس واقعہ سے سبق لے کر اپنے پاس پڑوس میں ضرورت مندوں کو تلاش کرکے ان کی ضرورت میں کوشش کرنی چاہئے ائمہ مساجد ومدارس کے ذمہ دار مساجد کمیٹیوں کے صدور اور سماجی خدمت گاروں کو اس طرف توجہ دینے کی سخت ضرورت ہے تاکہ ہمارے اطراف میں رہنے والے لوگ پرسکون زندگی بسر کرسکیں اور ہمارے لئے نجات وبلندی درجات کا سبب ہو۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest