پاکستانی فوج نے کیا 50 ہزار بے قصور شہریوں کا قتل

پاکستان نے دہشت گردی سے نمٹنے کے نام پر 2002 سے اب تک تقریبا 50 ہزار بے قصورلوگو ں کا قتل کردیا ہے اورپاکستانی فوج کی اس طرح کی کارروائیوں سے متاثر 50 لاکھ سے زائد لوگ بے گھر ہوکر بھٹکنے کو مجبور ہیں۔ رپورٹ کے مطابق 20 جنوری 2014 کی شروعات میں پاکستانی فوج نے افغان سرحد کے قریب ہم جونی علاقے میں رات کو ہوئے ہوائی حملے میں پاکستانی طالبان کے سب سے بڑے کمانڈر عدنان رشید اور اس کے گھر کے پانچ لوگوں کو گولی ماردی تھی۔ رشید اور اس کے اہل خانہ کو واقعی مارنے سے پہلے اسے مارنے کی ایک کوشش میں فوج نے اس کے پڑوسیوں پر غلطی سے بم گرادیا تھا۔ جس میں ان کی موت ہو گئی تھی۔ سماجی کارکنان کا دعوی ہے کہ ان معاملوں میں ثبوت جٹانے والوں پر بھی پاک فوج ظلم کر رہی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram