نیتا جی یہ کیا بول گئے ؟دیکھئے پوری خبر

لوک سبھا الیکشن کی مہم کے دوران ایک دوسرے پر الزام تراشی کرتے ہوئے لیڈران اکثر متنازع بیانات دیتے رہتے ہیں. اسی کڑی میں مدھیہ پردیش کی رتلام جابوا نشست سے بھاجپا امیدوار گمان سنگھ ڈمور نے اپنے لوک سبھا حلقے میں ہفتہ کو ایک انتخابی مہم کے دوران  متنازع بیان دے دیا ہے . اپنے پارلیمانی حلقہ میں مہم کے دوران گمان سنگھ نے ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان کے بانی محمد علی جناح کو عالم بتایا اور کہا کہ آزادی کے وقت جواہر لال نہرو کی ضد کی وجہ سے ہی ملک کا بٹوارہ ہوا تھا،ڈامور نے آزادی کی تحریک کا ذکر کرتے ہوئے کہا، “سال 1942 میں بھارت چھوڑو تحریک شروع ہوئی تھی، اس کے بعد ہمارے ملک میں وزیر اعظم بننے کی دوڑ شروع ہوگئی تھی. کانگریس کے کچھ لوگ چا ہتے تھے ہم وزیر اعظم بنیں. اگر آزادی کے وقت پنڈت جواہر لال نہرو ضد نہیں کرتے تو ملک کے دو ٹکڑے نہیں ہوتے.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram