محنت اور جدوجہد سے میگااسٹار بنے روی کشن

ممبئی: بھوجپوری سنیما کے میگااسٹار روی کشن آج 50 سال کے ہوگئے۔انہوں نے فلم انڈسٹری میں محنت اور جدوجہد سے اپنی خاص شناخت بنائی ہے۔اتر پردیش کے جون پور ضلع کے كیراكت تحصیل کے چھوٹے سے گاؤں ورائي وسي میں پنڈت شیام نارائن شکلا اور مسز جڑاوتي دیوی کے گھر میں 17 جولائی 1969 کو پیدا ہوئے روندر ناتھ شکلا عرف روی کشن کو بچپن کے دنوں سے اداکاری کا شوق تھا۔
انہیں اداکاری کا شوق کب ہوا انہیں خود یاد نہیں ہے لیکن ریڈیو میں گانے کی آواز ان کے پاؤں کو تھركنے پر مجبور کر دیتی تھی۔کہیں بھی شادی ہو اگر بینڈ کی آواز ان کے کانوں میں گئی تو وہ خود کو کنٹرول نہیں کر پاتے تھے. یہی وجہ ہے جب نوراتری کی شروعات ہوئی تو انہوں نے پہلی بار اداکاری کی جانب قدم رکھا۔روی کشن نے رام لیلا میں ماں سیتا کے کردار سے اپنے اداکاری کی شروعات کی. ان کے والد پنڈت شیام نارائن شکلا کو یہ قطعی پسند نہیں تھا کہ ان کے بیٹے کو لوگ نچنيا گوويا کہیں، اسی لیے انہیں مار بھی کھانی پڑی لیکن روندر کے خوابوں پر اس کا کوئی اثر نہیں پڑا. ماں نے روندر کے خوابوں کو پورا کرنے کا فیصلہ کیا اور کچھ پیسے دیے اور اس طرح کے خواب کا احساس کرنے کے لئے وہ سپنوں کی شہر ممبئی پہنچ گئے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest