کمل ناتھ کی منھ بولی بیٹی بنی مدھیہ پردیش ودھان سبھا کی وائس اسپیکر

مدھیہ پردیش کے سابق وزیرداخلہ آنجہانی لکھی رام کانورے کی صاحبزدای محترمہ حنا کانورے آج مدھیہ پردیش اسمبلی کی وائس اسپیکر منتخب ہوئیں،بی جے پی نے جگدیش دیوڑاکو وائس چیئر مین عہدے کیلئے اپنا امیدوار بنایاتھا،واضح ہوکہ دوروزہ قبل ہوئے اسپیکر چنائو میں بھی بی جے پی نے مکڑائی کے سابق راجہ اور ایم پی کے سابق وزیر وجے شاہ کو اسپیکر کے عہدے کیلئے اتاراتھالیکن کانگریس امیدوار نربدا پرساد پرجاپتی اسپیکر بنے اوروائس چیئرمین کے عہدے کیلئے بھی بی جے پی نے اپنا امیدوار میدان میں اتاراجس کی وجہ سے بی جے پی میں ہی مخالفت کی آواز اٹھ رہی ہے، وائس چیئرمین کے انتخاب کے ساتھ مدھیہ پردیش اسمبلی کاسرمائی اجلاس غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی ہوگیا،صوبائی وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے اپوزیشن کے ہنگامے پر سوال کھڑے کرتے ہوئے کہاکہ بی جے پی صحیح طریقے سے اپوزیشن کارول نہیں اداکررہی ہے، وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے کہاکہ بی جے پی کے 15سالوں کے کارناموں کاچٹھا ہم عوام کے سامنے پیش کریںگے، اسپیکر اوروائس اسپیکر کے انتخاب میں وزیراعلیٰ کمل ناتھ اپوزیشن کی بی جے پی کے رویے سے خاصے ناراض ہیں ،اگر اپوزیشن کاتعاون ہمیں ملتا تو ہم وائس چیئرمین کاعہدہ اپوزیشن کو دے دیتے ،بہر حال یہاں یہ وضاحت ضروری ہے کہ نکسلی حملے میں حنا کانورے کے والد کی موت ہونے سے اسوقت کمل ناتھ نے کہاتھا کہ اب وہ حنا کانورے کے باپ ہیں ،اور دختر مذہب کافرض نبھاتے ہوئے حنا کووائس اسپیکر بناکردھرم پتا کافرض نبھا یاہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *