جموں و کشمیر کے سابق اسپیشل پولیس آفیسر کا اغوا کے بعد قتل

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیاں میں گذشتہ رات مشتبہ جنگجوؤں نے ایک سابق اسپیشل پولیس آفیسر (ایس پی او) کو اغوا کے بعد گولیاں مار کر ہلاک کردیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ سابق ایس پی او بشارت احمد وگے ولد غلام احمد وگے کی گولیوں سے چھلنی لاش گذشتہ رات دیر گئے ضلع پلوامہ کے نکلورہ سے برآمد ہوئی۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جہاں ریاض احمد وگے اور زاہد احمد وگے نامی دو افراد کو رہا کیا گیا، وہیں بشارت نامی سابق ایس پی او کو ہلاک کیا گیا۔ انہوں نے بتایا کہ ریاستی پولیس نے بشارت کی لاش برآمد کرکے طبی اور قانونی لوازمات کی ادائیگی کے بعد ورثاءکے حوالے کردی۔بیان میں کہا گیا ‘ریاض احمد ، زاہد احمد اور بشارت ساکنان ربن شوپیاں کو جنگجوؤں نے زبردستی بندوق کی نوک پر اغوا کرکے اپنے ساتھ لے گئے۔ چنانچہ دو افراد کو بعد میں چھوڑ دیا گیا تاہم بشارت نامی نوجوان کی گولیوں سے چھلنی نعش نکلورہ پلوامہ سے برآمد کی گئی۔ قانونی لوازمات پورے کرنے کے بعد میت ورثا کے حوالے کی گئی۔ اس سلسلے میں مختلف دفعات کے تحت کیس درج کرکے مزید تحقیقات شروع کی گئی ہے۔بتادیں کہ قریب 9 افراد کو اغوا کیا جن میں سے دو کو ہلاک جبکہ باقی دیگر کو رہا کیا گیا۔ رہا کئے جانے والوں میں سے ایک کو زخمی حالت میںچھوڑ دیا گیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest