ہندوستان اور پاکستان کے رشتوں میں کشیدگی کے درمیان عمران خان کا بڑا فیصلہ

پاکستان کی عمران حکومت نے دہشت گرد تنظیم جماعت الدعوۃ پر لگائی پابندی

جموں و کشمیر کے پلوامہ میں ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد ہندوستان اور پاکستان کے درمیان کشیدگی بڑھتی جارہی تھی۔ ہر چہار جانب دہشت گردانہ حملہ کی مذمت ہورہی تھی۔ اسی بیچ ہندوستان اور پاکستان کے رشتوں میں کشیدگی کے درمیان جمعرات کو پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے قومی سلامتی کمیٹی کی میٹنگ کی ۔ اس میٹنگ میں کئی بڑے فیصلے کئے گیے ہیں ۔یقیناً دہشت گرد کا کوئی مذہب نہیں ہوتا ہے۔ پاکستانی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق دہشت گرد تنظیم جماعت الدعوۃ پر پابندی عائد کردی گئی ہے ۔ پلوامہ حملہ کے بعد ہندوستان اور پاکستان کے رشتوں میں کشیدگی کے درمیان جمعرات کو پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے قومی سلامتی کمیٹی کی میٹنگ کی ۔ اس میٹنگ میں کئی بڑے فیصلے کئے گیے ہیں ۔ پاکستانی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق دہشت گرد تنظیم جماعت الدعوۃ پر پابندی عائد کردی گئی ہے ۔علاوہ ازیں فلاح انسانیت تنظیم پر بھی پابندی لگادی گئی ہے ۔ ان دونوں دہشت گرد تنظیموں کا تعلق ممبئی حملہ کے ملزم حافظ سعید سے ہے ۔ میٹنگ میں ان دونوں تنظیموں کو غیر قانونی اور کالعدم قرار دیا گیا ۔ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں تینوں مسلح افواج کے سربراہان، حساس اداروں کے سربراہان اور سیکورٹی حکام سمیت خزانہ، دفاع، خارجہ کے وفاقی وزرا اور وزیر مملکت برائے داخلہ بھی شریک ہوئے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest