ہاردک پٹیل کی مشکلات میں اضافہ۔الیکشن لڑنا ہوا تقریبا ناممکن

ہاردک پٹیل کی مشکلات میں اضافہ ہوگیا جب سپریم کورٹ نے فوری سماعت سے انکار کردیا  ۔ ہاردک پٹیل نے گجرات ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف اپیل کی ہتھی جس میں ان کے الیکشن لڑنے پر روک لگا دی گئی تھیسپریم کورٹ نے کانگریس لیڈر ہاردک پٹیل کی درخواست پر فوری طور پر سماعت سے انکار کر دیا ہے۔ ہاردک نے گجرات ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف اپیل کی تھی جس میں ان کے الیکشن لڑنے پر روک لگا دی گئی تھی۔ سپریم کورٹ کے اس فیصلے کو پاٹیدار رہنما کے لئے جھٹکے کے طور پر دیکھا جا رہا ہے۔گجرات ہائی کورٹ نے ہاردک پٹیل کے خلاف دائر فساد بھڑکانے کے معاملہ میں 29 مارچ کو یہ فیصلہ سنایا تھا۔ سال 2018 میں کورٹ نے پاٹیدار لیڈر ہاردک پٹیل کو مجرم قرار دیتے ہوئے 2 سال کی جیل کی سزا سنائی تھی۔گجرات ہائی کورٹ کے فیصلے کے بعد ہاردک نے سپریم کورٹ کا رخ کیا تھا۔ گجرات میں لوک سبھا انتخابات کے لئے نامزدگی کی آخری تاریخ 4 اپریل ہے۔ ایسے میں عدالت کی جانب سے معاملہ میں فوری سماعت سے انکار کرنے پر اب ہاردک کا الیکشن لڑنا تقریبا مشکل ہو گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest