مشہور اداکار ،ڈرامہ نگار ،تھیٹر آرٹسٹ،ادیب اور اسکالر گریش کرناڈ نہیں رہے

کافی عرصے سے بیمار چل رہے معروف فلم اداکار، فلم ڈائریکٹر، مصنف اور تھیٹر آرٹسٹ گریش کرناڈ کا 10 جون بروز پیر81 سال کی عمر میں انتقال ہو گیا۔ وہ ایک طویل عرصہ سے بیمار چل رہے تھے۔ انہوں نے بنگلورو میں اپنی زندگی کی آخری سانس لی۔ گزشتہ مہینے ہی انہوں نے اپنا 81 واں جنم دن منایا تھا۔
گریش کرناڈ کی پیدائش 1938 میں ماتھیرن میں ہوئی تھی جو اب مہاراشٹر میں ہے۔ ان کی ابتدائی تعلیم مراٹھی زبان میں ہوئی۔ تعلیم کے دوران ہی ان کا جھکاؤ تھئیٹر کی طرف بڑھ گیا۔ جب وہ 14 سال کے ہوئے تو ان کا کنبہ کرناٹک کے دھارواڑ منتقل ہو گیا۔ انہوں نے دھارواڑ کے کرناٹک آرٹس کالج سےحساب اور اسٹیٹسٹک میں بی اے کی پڑھائی کی۔ گریجویشن کے بعد وہ سیاست اور معاشیات کی تعلیم کے لئے انگلینڈ کے آکسفورڈ پہنچے۔ وہ 1963 میں آکسفورڈ یونین کے صدر بھی چنے گئے۔
گریش کرناڈ کو زیادہ تر آرٹ موویز کے لئے جانا جاتا ہے آخری ان کی فلم سلمان خان کی فلم ٹائگر زندہ ہے تھی جسمیں ان کو ناک میں ٹیوب لگائے ہوئے دیکھا گیا تھا ۔درحقیقت میں وہ اصل زندگی میں بیمار تھے اور ناک میں لگی اس نلی کے ذریعہ انہیں ضروری دوا اور کھانا دیا جا رہا تھا۔
گریش کرنارڈ کو پدم بھوشن ،پدم شری ،ساہتیہ اکادمی ،کالی داس سمان جیسے کئی بڑے ایوارڈز سے نوازا گیا انھون نے کنڑ تامل تیلگو اور بے شمار ہندی فلموں میں کام کیا ۔ٹائگر زندہ ہے ،چاک اور ڈسٹر ،شوائے اپنے پرائے ، منتھن ،نشانت ،رتن دیپ وغیرہ انکی مشہور فلمیں ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest