غزل

آپ میری نگاہوں میں ہیں
سینکڑوں سنگ راہوں میں ہیں

رات سپنے میں دیکھا کہ ہم
ایک دوجے کی بانہوں میں ہیں

آپ سے کیا کریں ہم گلہ
آپ تو خیرخواہوں میں ہیں

وہ زمانے سے کیوں کر ڈریں
عشق کی جو پناہوں میں ہیں

کل خطرناک مجرم تھے جو
آج وہ بے گناہوں میں ہیں

آج گلشن ترے تذکرے
فن کے سب بادشاہوں میں ہیں

گلشن بیابانی۔ میٹھا نگر۔ پونہ

رابطہ۔9421772841

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest