دہلی وقف بورڈ تقسیم کرے گا 4ہزار لحاف۔زندہ باد امانت اللہ خان

دہلی میں کڑکڑاتی ٹھنڈ کی شروعات ہوچکی ہے ایسے میں معاشرہ میں ایک بڑی آبادی وہ پائی جاتی ہےجس کے پاس دو وقت کی روٹی کا انتظام نہیں ہوتا اور وہ فٹ پاتھ سے لیکر خالی پارکوں اور ٹھیلوں پر کڑکڑاتی ٹھنڈ میں اپنی راتیں بسر کرنے پر مجبور ہوتے ہیں۔ان کے سروں پر چھت میسرنہیں ہوتی تو سردی بھی ان غریبوں پر کوئی رحم نہیں کرتی بعض اوقات انتظامیہ کو فٹ پاتھوں کے کنارے اکڑے ہوئے جسم میں صرف لاشیں ملتی ہیں ایسے میں دہلی میں واحد ایک سرکاری ادارہ ہے جس نے بے سہارا اور ضرورتمندوں کی اس مجبوری کی طرف دھیان دیا ہے۔دہلی وقف بورڈ نے طے کیا ہے کہ وہ اس سردی کے موسم میں تقریبا 4ہزار لحاف ضرورتمندوں میں تقسیم ک رے گا جس کی شروعات آج بورڈ چیئرمین امانت اللہ خاں نے اپنے آفس میں غریبوں میں لحاف تقسیم کرکے کی۔امانت اللہ خان سے لحاف لیتے ہوئے ضرورتمندوں کے چہرے پر خوشی صاف محسوس کی جاسکتی تھی۔لحاف لینے کے بعد انہوں نے چیئرمین امانت اللہ خان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے انھیں دعائیں دیں۔اس موقع پر امانت اللہ خاں نے کہا کہ ہم نے طے کیا ہے کہ آئندہ دنوں میں دہلی وقف بورڈ کی جانب سے ہم 4ہزار لحاف تقسیم کریں گے جس کے لئے کوئی بھی ضرورت مند آفس میں رابطہ کرکے اپنا نام لکھا سکتا ہے اور لحاف لے جاسکتا ہے۔امانت اللہ خان نے مزید کہاکہ اوقف کا اصل مقصد فلاحی کاموں کے ساتھ ساتھ غریبوں اور بے سہارا لوگوں کی بنیادی ضرورتوں کا خیال رکھنا ہے اور اگر دہلی وقف بورڈ یہ کام نہیں کرے گا تو کون کرے گاامانت اللہ خان نے آگے کہاکہ الحمدللہ دہلی وقف بورڈ سے فلاحی اور رفاہی کاموں کا ایک سلسلہ شروع ہوا ہے جسے سب جگہ سراہا جارہاہے اور ہمیں لوگوں کی دعائیں مل رہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ شائد لوگوں کی دعاؤں کا ہی نتیجہ ہے کہ الل تعالی وقف بورڈ سے یہ نیک کام لے رہاہے اور اس میں برکت بھی دیر ہاہے۔امانت اللہ خان نے مزید کہاکہ دہلی وقف بورڈ کے ذہن میں کئی فلاحی منصوبے ہیں جنھیں ہم آنے والے وقت میں پورا کریں گے اور ان کے لئے کسی بھی طرح پیسوں کی کمی نہیں ہونے دی جائے گی اور دہلی وقف بورڈ آئندہ دنوں میں ایک ایسے ادارے کی صورت میں اپنی پہچان بنائے گا کہ ہر ضرورتمند اور غریب اس ادارے سے رجوع کرے گا اور ان کی ضرورتیں انشاء اللہ پوری کی جائیں گی۔غور طلب ہے کہ امانت اللہ خاں کی قیادت میں دہلی وقف بورڈ آئے دن کوئی نہ کوئی ایسا کام کرتا رہتا ہے جس سے لوگوں کی دعائیں ملتی ہیں اور روز بورڈ آفس میں ضرورتمند لوگ خاص کر خواتین اپنی درخواستیں لیکر آتی ہیں جنکی وقف بورڈ مدد کرتا ہے،غریبوں کے علاج سے لیکر بے سہارا اور یتیم بچوں کی کفالت،غریب طلبہ کی فیس تک لئے دہلی وقف بورڈ نے اپنے دروازے کھول رکھے ہیں جبکہ آئندہ دنوں میں کئی بڑے فلاحی منصوبے بھی وقف بورڈ کے زیر غور ہیں جن پر جلد ہی عمل شروع کیا جائے گا۔ اس موقع پر بورڈ کے سیکشن آفیسر حافظ محفوظ محمد،لیگل آفیسر قسیم صاحب بھی موجود تھے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *