اروناچل تشدد میں زخمی نوجوان سے راہل گاندھی نے ملاقات کی

گوہاٹی:کانگریس صدر راہل گاندھی نے وہاںکے مقامی اسپتال میں داخل اروناچل پردیش تشدد میں زخمی دو لوگوں سے ملاقات کرکے ان کی تیمارداری کی۔ مسٹر گاندھی ایک دن کے گوہاٹی دورے پر ہیں۔وہ یہاں پہنچنے کے بعد سیدھے اپولو اسپتال گئے جہاں داخل دونوں زخمیوں سے ملے۔ کانگریس صدر کےساتھ پارٹی کے ریاستی اکائی انچارج ہریش راوت اور ریاست کےپارٹی سربراہ رپن بورا کے علاوہ دیگر لیڈر تھے۔ اروناچل پردیش کے دارالحکومت ایٹا نگر میں گزشتہ ہفتے وسیع سطح پر ہوئے تشدد میں زخمی ہوئے دو لوگوں سے ملے اور ان کا احوال دریافت کیا۔مسٹر گاندھی نے بعد میں ایک ریلی سے خطاب کیا جس میں تشدد کےلئے اروناچل پردیش میں بھارتیہ جنتا پارٹی کی حکومت پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ بی جےپی ملک میں بدامنی پھیلانا چاہتی ہے۔ کانگریس سربراہ نارتھ ایسٹ کانگریس کو- آرڈینیشن کمیٹی کی بھی میٹنگ کریں گے اور پارٹی کے شمال مشرق ضلع کمیٹیوں اور بوتھ کمیٹیوں کے صدور کی الگ سے میٹنگ کریں گے۔ واضح رہےکہ گزشتہ روز اروناچل پردیش میں ریاست کے باہر کی چھ برادریوں کو مستقل شہری ہونے کا سرٹیفکیٹ دینے کے خلاف پرتشدد احتجاج ہوا ہے اوراتوار کو دوپہر تقریبا ایک بجے مشتعل مظاہرین نے نائب وزیر اعلیٰ چونے مین کے بنگلے پر دھاوا بول دیا اور وہاں آگ لگا دی۔ نائب وزیر اعلیٰ کی ایک گاڑی کو بھی مظاہرین نے جلا دیا اور وزیر اعلیٰ پیما کھانڈو کے گھر کی باہر آئی ٹی بی پی کے جوانوں اور مظاہرین کے درمیان جھڑپ بھی ہوئی۔ اس درمیان احتجاج کاروں نے ریاست کے ماحولیات اور جنگلات کے وزیر نبام ریبیا کے گھر پر بھی آگ لگا دی۔ نبام ریبیا پی آر سی جوائنٹ پاور ہائی کمیٹی کےچیئرمین بھی ہیں۔ مسلسل بڑھتی کشیدگی کے مدنظر نائب وزیر اعلیٰ چونا مین کو اتوار کی صبح ایٹا نگر سے نامسائی ضلع میں شفٹ کر دیا گیاتھا۔بی جے پی نے اس تشدد کے لئے کانگریس کو مورد الزام ٹھہرایا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest