کانگریس کے صدر راہل گاندھی رافیل مسئلے پر ’دشمن ملک‘کے اشاروں پر بول رہے ہیں

ہریانہ کے وزیرصحت انل وج انل وج کا الزام

انبالہ:ہریانہ کے وزیرصحت انل وج نے آج الزام لگایا کہ کانگریس کے صدر راہل گاندھی رافیل مسئلے پر ’دشمن ملک‘کے اشاروں پر بول رہے ہیں۔یہاں جاری ایک بیان میں مسٹر ویج نے رافیل طیارہ سودے پر راہل کے باربار بی جےپی پر انگلی اٹھانے پر کہا کہ کانگریس صدر کےپاس کوئی ثبوت نہیں ہے اور بغیر ثبوتوں کے بات کررہے ہیں۔مسٹر ویج نے کہا کہ لوک سبھا میں بھی ان کو بتادیا گیا ہے اور سپریم کورٹ نے بھی اپنا فیصلہ دے دیا ہے کہ اس میں کچھ بھی غلط نہیں ہے۔مسٹر ویج نے کہا کہ خالی جہاز اور ہتھیاروں سے لیس جہاز کی شرح میں فرق ہوتا ہےپر اب راہل جاننا چاہتے ہیں کہ اس میں کون سے ہتھیار لگائے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ بات ’دشمن ملک‘ کو نہیں بتائی جاسکتی۔انہوں نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ راہل کسی دشمن ملک کے اشاروں پر ایسا کررہے ہیں۔اترپردیش میں سماجوادی پارٹی اور بہوجن سماج پارٹی کے اتحاد کے سلسلے میں مسٹرویج نے کہا کہ یہ بجلی کے دوتاروں کے جڑنے جیسا ہے اور ان کا فیوز اڑنا لازمی ہے۔مسٹر ویج نے دعوی کیا کہ جیند ضمنی انتخابات میں بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جےپی)کی ہی جیت ہوگی۔انہوں نے کہا کہ کانگریس کے لیڈر آپس میں ہی لڑ رہے ہیں اور امیدوار رندیپ سنگھ سرجےوالا کو ’پھنسایا‘ گیا ہے۔انہوں نے انڈین نیشنل لوک دل اور جن جنایک جنتا پارٹی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ چچا بھتیجے آپس میں ہی لڑرہے ہیں۔مسٹر ویج نے الزام لگایا کہ دہلی کے وزیراعلیٰ اروند کیجریوال نے دہلی کو برباد کردیا ہے اور اب چونکہ دہلی سنبھل نہیں رہی توہریانہ میں آنا چاہتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram