آخرکیوں کیا امانت اللہ خان نے کاکا نگر کادورہ؟؟

خالی وقف پلاٹ کو غیر قانونی قابضین سے کرایا آزاد،قابضین نے پلاٹ پرقبضہ کرکے اپنا تالا لگادیا تھا

نئی دہلی:دہلی وقف بورڈ کے چئرمین امانت اللہ خان نے کاکانگرمیں واقع وقف جائدادکا ہنگامی دورہ کیاجہاں موقع پر کاکانگر مسجد کے پیچھے واقع وقف بورڈ کی خالی پڑی پراپرٹی پر غیر قانونی قبضہ کرلیا گیا تھاجسے موقع پر ہی قابضین سے آزاد کرایا گیا اور فورا مارکیٹ سے نئے تالے منگواکر پلاٹ کے گیٹ پر لگادیئے گئے اور وہاں موجود لوگوں کو پلاٹ کی حفاظت سے متعلق ضروری ہدایات جاری کردی گئیں۔تفصیل کے مطابق کاکا نگرمیں وقف جائداد سے متعلق گزشتہ کئی دنوں سے کافی شکایات موصول ہورہی تھیںجس پروقف بورڈ کے چیئرمین امانت اللہ خان نے فورا ایکشن لیتے ہوئے وقف بورڈ کی ٹیم کے ساتھ موقع پر جاکر جائزہ لیااور جو شکایتیں موصول ہورہی تھیں انھیں فوری طور پر حل کیا۔امانت اللہ خان کے ساتھ وقف بورڈ کے چیف ایگزیکیٹیوافسرشمیم اختر،چیف لیگل افسرمحمد قسیم،بورڈ کے سیکشن افسر محفوظ محمداور بورڈ ممبرایڈوکیٹ حمال اختر موجود تھے۔وقف بورڈ کی ٹیم نے کاکا نگر مسجدمیں مغرب کی نماز کی ادائگی کے بعد مسجد کے پیچھے خالی پڑے بورڈ کے پلاٹ کا جب معائنہ کیا تو دیکھا کہ پلاٹ پر لگے مین گیٹ پر کسی نے بورڈ کے تالے توڑ کر اپنے تالے لگالئے تھے جب کہ ابھی گزشتہ دنوں ہی پلاٹ کو محفوظ کرنے کے لئے اس کی وال باؤنڈری کرائی گئی تھی مگر وقف املاک پر بری نگاہ رکھنے والوں نے نہ صرف غیر قانونی قبضہ کرلیا بلکہ پلاٹ کے گیٹ پر اپنا تالا بھی لگادیا۔موقع پر موجود بورڈ کی ٹیم نے فوری طور پر ان تالوں کو تڑوایا اور مارکیٹ سے نئے تالے منگاکر گیٹ پر لگادئے گئے اور وہاں موجود لوگوں کو وقف پراپرٹی سے متعلق ضروری ہدایات دیدی گئیں۔جب تالا تڑوایا گیا تو کسی نے بھی موقع پر بورڈ کی ٹیم کی مخالفت کی جرائت نہیں کی اور اس طرح بنا کسی جھگڑے کے وقف پراپرٹی کو قابضین سے آزاد کرالیا گیا۔یہاں سے فارغ ہوکر وقف بورڈ کی ٹیم نے کاکا نگر میں واقع دیگر وقف املاک کا دورہ کیا اور قبرستان وغیرہ کا جائزہ لیا تاہم باقی وقف املاک پر اس طرح کی کوئی شکایت نظر نہیں آئی ۔چیئرمین وقف بورڈ امانت اللہ خان نے کاکا نگرمیں واقع خالی پڑی تمام وقف املاک پردہلی وقف بورڈ کے سائن بورڈ لگانے کی ہدایت دی ہے امید ہے کہ جلد ہی تمام پلاٹوں پر وقف بورڈ کے سائن بورڈ لگادئے جائیں گے جس سے عام لوگوں کو بھی وقف پراپرٹی پہچاننے میں آسانی ہوگی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram