اے پی بندکے دوران تمام تجارتی اور تعلیمی ادارے بند رہے

وجئے واڑہ: اے پی کو خصوصی درجہ کے لئے جدوجہد کرنے والی سمیتی کی جانب سے کی گئی ریاست بند کی اپیل کا آج بہتر ردعمل دیکھا گیا کیونکہ تمام تجارتی ادارے ‘ تعلیمی ادارے اور دفاتر بند رہے۔ اس بند کی حمایت بائیں بازو اور کانگریس نے کی تھی۔ اہم مقامات اور تجارتی مقامات پر بائیں بازو کے کارکنوں نے بڑے پیمانہ پر احتجاج کیا اور بند کا نفاذ عمل میں لایا۔ سمیتی کے کنوینر سی سرینواس اور کانگریس کے صدر رگھوویراریڈی نے آج صبح بس اسٹیشن پر دھرنا دیا۔ تلگودیشم کے کارکنوں نے راماواراپاڈوجنکشن پر دھرنادیا۔ کڑپہ ‘اونگول‘ راجمندری‘ گنٹور‘نیلور‘کرنول ٹاون اور دیگر مقامات پر بھی ایسے ہی دھرنے دیئے گئے ۔ ان لیڈروں آرٹی سی بس اسٹیشنوں کے باب الداخلہ پر دھرنا دیتے ہوئے بسوں کو بس اسٹیشنوں اور ڈپوز سے باہر آنے سے روک دیا۔ تمام آر ٹی سی اسٹیشنس سنسان نظر آئے ۔ اے پی ایس آر ٹی سی کی بس خدمات ریاست کے کئی ٹاونس میں بری طرح متاثر رہیں۔ ریاست میں صبح سے ہی عام زندگی مفلوج رہے ۔ پولیس نے کہا کہ کسی ناگہانی واقعہ کی کوئی اطلاع نہیں ملی ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest