دس سالہ معصوم بچی کے ساتھ بدفعلی کرنے والے ملزم کو 10سال قید بامشقت کی سزا

برھانپور(مہ لقہ انصاری کے ذریعے)دس سالہ معصوم بچی کو بہلا پھسلا کر لے جانے اور بدفعلی کرنے کے الزام میں خصوصی سیشن جج(جنسی جرائم میں اطفال کا تحفظ ایکٹ 2012)برھانپور جناب راجیش نندیشور نے ملزم ہرسنگھ عرف سیا،عمر 21سال ولد چماریا ،ساکن بندھان فالیا،اٹاریہ ضلع برھانپور کو آج 10سال قیدبامشقت کی سزاسنائی اور 24ہزارروپیئے کاجرمانہ بھی عائد کیا سونیل کوریل نے بتایاکہ 31-12-2015کی شام کو فریادی اپنی بیوی کے ساتھ کھیت کی رکھوالی کیلئے گیاتھا گھر میں 15سال نابالغ بچیوں سمیت 2لڑکیاں اور 7لڑکے گھر پر تھے، اگلے دن یعنی 01-1-16کو جب وہ اپنے گھرواپس آئے تو لڑکی نہیں ملی معلومات میں پتہ چلاکہ لڑکی رات سے ہی گھر پر نہیں ہے ،رشتہ داروں اور آس پاس میں پتہ کرنے پر معلوم ہواکہ گائوں کا ایک شخص ہر سنگھ عرف ہرسیا ولد چماریا بھلا لابھی فرار ہے، پولس تھانہ نمبولہ میں اس کی رپور ٹ کرنے پر نشاندہی کی بنیاد پر پولس نے لڑکی کو ملزم ہرسنگھ کے قبضے سے حکم سنگھ راج پوت کے گرام گوراڈیا ضلع کھنڈوہ کے کھیت سے برآمد کی، لڑکی نے بتایاکہ ملزم نے اس کو بہلا پھسلا کر لے گیا اورکئی بار مجھ سے بدفعلی اور زناباالجبر کیا،پولس نے متعلقہ دفعات کے تحت کیس درج کرکے چالان عدالت میں پیش کیا،اس کیس میں حکومت اور مظلوم فریق کی طرف سے اسپیشل پروسیکیوشن آفسر جناب رام لال رندھاوے نے کامیابی کے ساتھ پیروی کی، عدالت نے تعزیرات ہند کی دفعہ 376(2),366,363اورجنسی جرائم سے بچوں کی حفاظت قانون کے تحت 10سال قید بامشقت کی سزاسناتے ہوئے 24ہزارروپیئے کاجرمانہ عائد کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest

RSS
Follow by Email
Facebook
Twitter
Pinterest
LinkedIn
Instagram