چارج شیٹ فرضی ہے اور یہ مودی سرکار کی سازش ہے:عاپ لیڈر کا الزام

نئی دہلی: دہلی کے چیف سکریٹری انشو پرکاش کے ساتھ مارپیٹ کے معاملہ میں وزیراعلیٰ اروند کیجریوال سمیت دیگر تیرہ لوگوں کے خلاف پٹیالہ ہائوس کورٹ میں چارج شیٹ داخل ہونے کے بعد عام آدمی پارٹی (عاپ) نے اسے جھوٹے الزامات پر مبنی بتایا ہے۔ اسکے ساتھ ہی عاپ نے اس چارج شیٹ کو لے کر مودی سرکار پر نشانہ بھی کیا ہے۔ دہلی سرکار کے وزیر گوپال رائے، ستیندر جین، کیلاش گہلوت، راجندر پال اور عمران حسین نے اس معاملہ پر گزشتہ روز ایک مشترکہ بیان جاری کیا ہے۔ اس بیان میں کہاگیا ہے کہ سیاست سے متاثر دہلی پولیس کے ذریعہ داخل چارج شیٹ فرضی اور جھوٹے الزامات پر مبنی ہے۔ اپنے بیان میں عاپ لیڈروں نے اس چارج شیٹ کو دہلی سرکار کے خلاف سازش اور بدلے کی کارروائی بتایا ہے۔ ان لیڈروں نے کہا کہ ۲۰۱۵ء میں اپنے سیاسی کریئر کی بری ہار کا سامنا کرنے کے بعد وزیراعظم نریندر مودی اور بی جے پی صدر امت شاہ نے منتخب حکومت کو معاف نہیں کیا۔ انہوں نے بدلہ لینے کے لیے لگاتار اپنی ایجنسیوں کے سہارے دہلی سرکار کو کچلنے کوشش کی جارہی ہے۔ اس سے پتہ چلتا ہے کہ مودی سرکار نے جھوٹے معاملوں میں عوام کی جانب سے منتخب ممبران کو پھنسانے کی اپنی ماضی کی کوششوں سے کچھ نہیں سیکھا ہے۔ ذرائع کے مطابق اس کیس میں وزیراعلیٰ کے سابق صلاح کار وی کے جین کو گواہ بنایا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Pin It on Pinterest