دہلی خواتین کمیشن کی صدر سواتی مالیوال نے مظفر پور شیلٹر ہوم عصمت دری معاملہ میں نتیش کمار کو خط لکھا

نئی دہلی: دہلی خواتین کمیشن کی صدر سواتی مالیوال نے بہار کے مظفر پور میں لڑکیوں کے ایک شیلٹر ہوم میں عصمت دری کے واقعات کی مذمت کرتے ہوئے قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کئے جانے کی مانگ کرتے ہوئے ریاست کے وزیر اعلی نتیش کمار کو خط لکھا ہے۔محترمہ مالیوال کا خط اس طرح ہے-’’نتیش کمار جی، آج پھر میں رات میں ٹھیک طرح سو نہیں پائی۔ مظفر پور کے گرلز شیلٹر ہوم کی بیٹیوں کی چیخیں مجھے گزشتہ کئی دنوں سے سونے نہیں دیتی. ان کے درد کے سامنے ملک کا سر شرم سے جھک گیا ہے۔ میں چاہ کر بھی اس درد کو اپنے آپ سے الگ نہیں کر پارہی ہوں،اسلئے میں آپ کو یہ خط لکھ رہی ہوں ۔میں جانتی ہوں کہ بہار میرے دائرہ اختیار میں میں نہیں آتا، لیکن ملک کی ایک خاتون ہونے کے ناطے میں یہ خط لکھ رہی ہوں۔ امید ہے آپ میرا یہ خط ضرور پڑھیں گے۔یہ لڑکیاں محض سات سے 14 سال کی عمر تھیں اور زیادہ تر یتیم تھیں‘‘۔انہوں نے خط میں لکھا ہے ’’کس طرح ‘ رضا کار تنظیم کا مالک برجیش ٹھاکر نام کا حیوان اور کئی افسر اور لیڈر روز رات میں ان کے ساتھ زیادتی کرتے تھے۔برجیش ٹھاکر کو وہ ’هنٹروالا انکل‘ کہتی تھی جو ہر رات لڑکیوں کو اپنی ہوس کا شکار بناتا تھا۔ چھوٹی سی 10 سال کی ایک معصوم نے بتایا ہے کہ کس طرح اس کومنشیات دیکر روز رات میں برجیش ٹھاکر اس کے ساتھ ریپ کرتا تھا.لڑکیاں رات ہوتے ہی کانپنے لگ جاتی تھی کیونکہ انہیں پتہ تھا کہ ان کے ساتھ رات میں ظلم و ستم کے پہاڑ توڑے جائیں گے‘‘۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *